ہر ماں کو پرسہ/ نظم

ہمارا پرسہ ہر ایک ماں کو

کیا ہو گا وہاں عالم
جب پھولوں نے پھولوں کو
پھولوں کے جنازوں پر
ہر سمت بچھے دیکھا
کیا ہو گا وہاں عالم
جب دل نے وہاں دل کے

ٹکڑوں کو کٹے دیکھا 
کیا ہو گا وہاں عالم جب
اشکوں نے آنکھوں کو
خوں رنگ سنے دیکھا


دل رک سا گیا ہو گا
دم سادھ لیا ہو گا
لاشہ جو پڑے دیکھا
مجبور وہاں ہر اک
دلسوز جگر لیکر
پیارے کو کھڑے دیکھا 
????
کلام:ممتازملک ۔پیرس

●●●

100% LikesVS
0% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں